NowNews.pk | 24/7 News Network

اوئے کون لوگ ہو تُسی، شرم نئیں آندی

تحریر : ظریف پشتون

بھلا ایسا بھی ہوتا ہے کیا؟

اکثراوقات ہم لوگ ایسےکارنامےسرانجام دیتے ہیں جومہذب لوگ دیکھ حیران وپریشان ہوجاتےھیں؟

شاید ہم لوگوں میں شعور کا فقدان ہے اور اگرہم باشعورہیں بھی تب بھی ایسےکام کرلیتے ہیں جو انسانیت سےہٹ کرہیں۔

پانی کےٹینکیوں سےلیکربیت الخلا تک کسی چیزکوصیح سلامت رہنے ہی نہیں دیتے۔ اکثر شہری علاقوں میں حکومت اور مخیراداروں نےہمارے لئےصاف ٹھنڈے پانی کےکولرز اور پانی صاف کرنےوالےفلٹرپلانٹس، بیت الخلا، پیدل چلنےوالوں کےلئےفٹ پاتھ، پارکس بنائے لیکن سب کےسب چند ہی وقتوں کے بعد آثار قدیمہ کا منظر پیش کرتے نظر آتے ہین۔

اس لئےکہ ہم اس کی حفاظت کرنےکی بجائےانہیں توڑدیتےہیں یا ان پرقبضہ جما کر باپ دادا کی جاگیر سمجھ بیٹھتے ہیں۔

پانی کےسبیلوں کی ٹوٹیاں توڑ کر دوسروں پر پانی پینےکاراستہ بند کردیتےہیں۔ یہ صدقہ جاریہ جو مخیر حضرات کرتےہیں وہ بھی ہم سےہضم نہیں ہوتا۔

کوشش یہی کرتے ہیں کہ اس کو توڑ کرخود تو پیاسے سہی مگر دوسرے بھی پیاسے رہیں۔ ہم اہنےآپ کو تو مہذب کہتےہیں مگر تہذیب تمیز سےکوسوں دورہیں۔

دیگر خبریں

لوڈنگ ۔۔۔